اردو اقوال
0 1 min 10 mths
خلوص کا اظہار کیجئے

سنہری اقوال زریں پوسٹ میں آج بہت ہی اچھی اور خوبصورت حکمت کی باتیں پیش کی جا رہی ہیں- جن کو پڑھ کر آپ کے دلوں کو یاقوتی ملےگی . اپنے احباب سے یہ کاوش ضرور شیئر فرما کر ہماری حوصلہ افزائی کیجئے گا. آپ کی محبّتوں کا شکریہ

تم اپنا مستقبل تو نہیں بدل سکتے لیکن تم اپنی عادات بدل سکتے ہو اور تمہاری عادات ہی تمہارا مستقبل بدلیں گیں. عبدالکلام

ان لوگوں کیلئے کامیاب بنو جو تمہیں ناکام دیکھنا چاہتے ہیں. بل گیٹس

تم مصیبت اور ضرورتکے وقت عبادت کرتے ھو. کاش مسرت اور فراغت کے لمحات میں بھی سر بسجود ہوتے. جبران

اصل ذہانت اس بات کو سمجھنا ہے کہ ہم زندگی، دنیا اور اپنے آپ کے بارے میں بہت کم جانتے ہیں. سقراط

وہ شخص تعریف کا مستحق ہے جو علم کی طاقت کے ساتھ شدت غضب کو زائل کر سکے. جالینوس

حرص کو اپنے دل میں جگہ نہ دو کہ تمہاری طاقت دوسروں سے زیادہ نہیں. ارسطو

جتنی جلدی کرو گے ،اتنی ہی دیر لگے گی یعنی صبر سے کام لیا کرو. چرچل

داناؤں کی زبان میں خدا کی طاقت ہوتی ہے. حکیم لقمان

حکمت کی باتیں
حکمت کی باتیں

عقل مند ہمیشہ غم و فکر میں مبتلا رہتا ہے

دوستی ایک خود پیدا کردہ رشتہ ہے

گناہوں پر نادم ہونا ان کو مٹا دیتا ہے اور نیکیوں پر مغرور ہونا ان کو برباد کر دیتا ہے

بچے کے لئے سب سے اچھی جگہ ماں کا دل ہے. بے شک بچے کی عمر کتنی ہی ہو

زیادہ قسمیں کھانے والا زیادہ جھوٹ بولتا ہے

کوشش کرو کہ گفتگو کی ابتداءتمہاری طرف سے نہ ہوا کرے اور تمہارا کلام جواب بنا کرے

حقیقی بڑا تو وہ ہے جو اپنے ہر چھوٹے کو پہچانتا ہو اور اس کی ضروریات کا خیال رکھتا ہو. شیخ سعدیؒ

سنہری اقوال زریں
سنہری اقوال زریں

سنہری اقوال زریں

کسی جاہل یا کم عقل شخص کو سمجھاتے وقت یہ خیال مت کرو کہ تم اس سے کیا کہہ رہے ہو بلکہ یہ دیکھو کہ وہ اس کا کیا نتیجہ اخذ کرتا ہے

اپنی زبان کی حفاظت اس طرح کرو جس طرح اپنے ایمان کی حفاظت کی جاتی ہے. ایمان کی حفاظت نہ کرنے سے ایمان کے چھوٹ جانے کا خدشہ ہے اور زبان کی حفاظت نہ کرنے سے عزیز و اقارب چھوٹ جانے کا

انسان اگر زبان کے استعمال کی بجائے دماغ کا زیادہ استعمال کرے تو بہت سے مسائل اور مشکلات سے بچ سکتا ہے.

قدرت نے انسان کو اگر اچھی عقل و شکل عطا کی ہے تو انسان کو اس کے اندررہنا چاہیے اگر وہ اس دائرے سے باہر نکلے گا تو ہر محفل و سوسائٹی سے باہر نکل جائے گا.

بے عزت انسان کی زندگی گندگی کے اس ڈھیر کی مانند ہے جہاں پر صرف جانور ہی کچھ تلاش کرتے دکھائی دیتے ہیں

مزید پڑھیں سنہری اقوال زریں

تنگ دستی و تنگ نظری معاشرتی ناہمواری پیدا کرنے میں بنیادی کردار ادا کرتی ہیں

ایسی قومیں جو قانونِ فطرت کی روندتی ہوئی بے حسی و بے اعتنائی کی شاہراہ پر سرپٹ دوڑتی چلی جائیں، بالآخر اندھے کنویں میں جاگرتی ہیں

غربت و افلاس انسان کے وقار اور اعتماد کو برباد کر دیتے ہیں

جب کسی انسان کا ایمان آباد ہو جائے تو پھر شیطان کا جہان سنسان ہو جاتا ہے

حق تلفی و ناانصافی ایسے ہی قابل نفرت عوامل ہیں جسے کسی مسلمان کے نزدیک حرام گوشت کا لقمہ

جہالت اور افلاس ترازو کے دو ایسے پلڑے ہیں جو اگر متوازی ہو جائیں توکفر کے نزدیک لے جا سکتے ہیں

متکبر انسان سور کی اکڑی ہوئی اس گردن کی مانند ہے جو اپنی کھال کی سختی کے باعث مڑ نہیں سکتی

منصف کے لیے یہ ضروری ہے کہ فیصلہ کرنے سے قبل وہ اتنا ضرور سوچے کہ ایک دن اسے بھی کسی ملزم کی طرح ایک بڑی عدالت کے سامنے پیش ہونا ہے

زیادہ عقل مند بننے سے عقل زائل ہو جاتی ہے

عقل مند بننا چھوڑ دو بہت کچھ سیکھ پاﺅ گے

سچائ انسانیت کا حسن ہے
جھوٹ دم گھٹنے والا دھوّاں ہے

ایک سعادت تھی جہاد مگر اسکو جرم قرار دیا گیا
جہاد ایک عبادت تھی مگر اسکو فساد قرار دیا گیا
ایک ضرورت تھی جہاد مگر اسکو بے کار کیا گیا
جہاد نصرت کا دروازہ تھا جسے ہم نے خود بند کردیا
رحمت کی بارش تھی جہاد مگر چھتریاں تان لی گئ
جہاد شھادت کی راہ تھی جو بند کردی گئ
جہاد عظمت کا نشان تھا جسے مٹادیا گیا
اور یہ ہرگز نہ بھولیے گا کے افضل اور اکبر جہاد نفس سے جنگ ہے

حکمت کی باتیں​

نیک نامی انسان کا زیور ہے
جھوٹ تمام گناہوں کی ماں ہے
غصّہ قابل ترین انسان کو بے وقوف بنادیتی ہے
نادان لوگ دل کا چین لٹا دیتے ہیں دولت کیلئے جبکہ دانشمند لوگ دولت لٹادیتے ہیں دل کے چین کیلئے

یاد رکھو​
جو شخص تمہاری باتوں کو غور سے نہ سنے انہیں سننے کی تکلیف نہ دو
سب سے بڑا گناہ وہ ہے جو کرنے والے کی نظر میں چھوٹا ہو
جب یہ پتہ چل جاتا ہے کہ زندگی کیا ہے تو وہ بہت کم بچی ہوتی ہے
جو شخص نصیحت مان لے وہ بعض اوقات نصیحت کرنے والے سے بھی بڑا ہوتا ہے
آسمان پر نظر ضرور رکھو پر یہ نہ بھولو کہ پیر زمین پر ہی رکھے جاتے ہیں​
نہیں ہوتی​

بخیل کے اندر وفا نہیں ہوتی
حاسد کو کبھی راحت نہیں ہوتی
تنگ دل کا کوئ دوست نہیں ہوتا
جھوٹے میں مروت نہیں ہوتی
خائن کبھی قابل اعتماد نہیں ہوتا
بد اخلاق کے اندر محبت نہیں ہوتی

انسان کو وہی ملتا ہے جس کی وہ کوشش کرتا ہے
ہر شخص کو چاہئے کہ سوچے اس نے کل کے لئے کیا بھیجا ہے
اللہ نے موت اور زندگی پیدا کی تاکہ تمہاری آزمائش کرے کہ کون تم میں اچھے کام کرتا ہے
آج عمل ہے حساب نہیں،کل حساب ہوگا عمل نہیں
احسان کی خوبی یہ ہے کہ اسے جتایا نہ جائے
وہ خوشی جو صرف اپنے لئے ہو بے کار ہے
اپنے فن اور قابلیت سے کمانا تعریف کے قابل ہے

ضروری گزارش تازہ تازہ سالگرہ مبارک کی پوسٹ کے ہمارے فیس بک پیج  کولائک اور فالو کریں

صوفی اقوال زریں – حق تعالی کا ذکر تمام گناہوں کو غرق کردیتا ہے


خلوص کا اظہار کیجئے

Leave a Reply